فاسٹ نیوز : وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈار نے کہا ہے کہ نواز شریف کا نام پاناما پیپرز میں نہیں،وزیراعظم کے خلاف کوئی کیس نہیں،سارا معاملہ پرائم منسٹر کے خلاف سازش ہے۔

پاناما کیس کی جے آئی ٹی کے سامنے پہلی پیشی کے بعد میڈیا سے گفتگو میں اسحاق ڈار نے کہا کہ مشرف دور میں بدنیتی کی بنیاد پر ریفرنسز بنائے گئے،اب یہ تماشا ختم ہونا چاہیے،ان کا اعترافی بیان کچرا تھا۔

انہوں نے مطالبہ کیا کہ وزیراعظم کی صاحبزادی مریم نواز کو طلب کرنے کے بجائے انہیں سوالنامہ بھیجاجائے۔ایک صحافی کے سوال پر اسحاق ڈار نے کہا کہ میں غصے میں نہیں ہوں دھوپ بہت ہے۔

وزیر خزانہ نے کہا کہ مجھے نوٹس اٹھائیس جون کو ملا،جو سوال پوچھے گئے ان کے جوابات دیئے ہیں ،معاملات شفاف ہیں ، وزیراعظم کا نہ پاناما پیپرز نہ ہی کسی اور جگہ نام ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ مشرف کے دور میں بدنیتی اور جھوٹ کی بنیاد پر ریفرنسز بنائے گئے ،ان ہی ریفرنسز کو سیاسی مخالفین اچھالتے رہتے ہیں،حدیبیہ ملز کیس میں رکارڈ کیا گیا میرا اعترافی بیان ردی کا ٹکڑا ہے،یہ تماشا ختم ہوناچاہیے۔

اسحاق ڈار نے کہا کہ جب ملک ترقی کرنے لگتا ہے یہ چکر شروع ہوجاتا ہے، میں نے لندن فلیٹس سے متعلق جے آئی ٹی کو ایک ایک پیسے کا حساب دے دیا،موجودہ حکومت کے دور میں ایک پائی کی کرپشن ثابت نہیں ہوسکی۔

ان کا مزید کہناتھاکہ سپریم کورٹ نے ارسلان افتخار کیس میں پروسیجر طے کئے،جج کے بیٹے کے لئے کوئی اور قانون جبکہ وزیراعظم پاکستان کے لئے کوئی اور قانون ہے۔

وفاقی وزیر خزانہ نے یہ بھی کہا کہ خواتین کے لیے ہمارے احترام کی ٹریننگ ہے ، مجھے برا لگ رہا ہے کہ مریم نواز شریف کو یہاں بلایا جارہا ہے، اگر علیمہ بہن اور عظمیٰ بہن کو بھی بلایا جائے گا تو بھی مجھے برا لگے گا،مریم کو بلانے کے بجائے سوالنامہ بھیجا جائے۔

انہوں نے عمران خان کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ تم کس منہ سے آرٹیکل 62،63 کی بات کرتے ہو؟تمہارے لئے کیلیفورنیا کا کیس ہی کافی ہے،تم ثابت کرو کہ میں غلط ہوں ،میں ثابت کروں سے درست کیا ہے، عمران خان1993ء میں میرے بیٹوں کے ساتھ بیٹھ کر میرا انتظار کرتے تھے۔

اسحاق ڈار نے مزید کہا کہ عمران خان نے بے نظیر کے خلاف بے ہودہ گفتگو کرچکے ہیں ، پی ٹی آئی سربراہ ڈرپوک آدمی ہے جو اپنی شادی چھپائے وہ کیا کرسکتا ہے،انہوں نے تو جمائما سے نکاح کے معاملے پر بھی جھوٹ بولا۔

وفاقی وزیر خزانہ نے عمران خان سے استفسار کیا کہ وہ آج دوسرا میر ترین پارلیمنٹرین کیسے بن گیا؟ مجھے فرگوس کی رپورٹ سے پتہ چلا کہ خان صاحب نے چندے کے پیسوں سے جوا کھیلا،پی ٹی آئی چیئرمین نے نوجوانوں کا اخلاق تباہ کردیا ۔

انہوں نے کہاکہ عمران خان مشرف کے جوتے چاٹتے رہے،مشرف کے ریفرنڈم کی حمایت میں عمران خان نے جامعہ کراچی میں گندے انڈے کھائے،جب سے الیکشن ہوئے ہیں عمران خان کو چین نہیں آیا۔

معزز ججز نے جے آئی ٹی کو نہیں کہا کہ وہ حدیبیہ پیپر ملز کو دیکھیں ، جے آئی ٹی کو اپنی ساکھ کو ثابت کرنا ہوگی،پاکستان اس وقت ٹیک آف اسٹیج پر ہے

Advertisements

Leave a Reply

Please log in using one of these methods to post your comment:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s